Announcement

Collapse
No announcement yet.

شناساں بن کر وہ میرے

Collapse
X
 
  • Filter
  • Time
  • Show
Clear All
new posts

    شناساں بن کر وہ میرے

    انتہاوّں پہ بھی اسکی ہم دل کو سمجھاتے رہے
    دریا دلی سےہی اپنی ہم خود کو بہلاتے رہے


    اسکا سّحر نہ ٹوٹے تبھی ہم سِحر سے خائف ہیں
    شب بھرجگنو بن کر وہ آنگن میں جگمگاتےرہے


    اپنے اپنے کام میں مہارت ہم دونوں رکھتے ہیں
    وہ زخم دیتے رہےعمر بھراور ہم مسکراتے رہے


    آخری شب کا آخری آنسو بچا رکھا بس اسکیلئے
    باقی جو بچا تھا سب لوٹتے رہےاورہم لٹاتےرہے


    جھلس چکا دل و جسم اسکے تکمیلِ خواباں میں
    یوں ستمگر بن کر میرے وہ مجھ کو آزماتے رہے


    جانےدلِ ناکام حسرتوں اور کیسے بیان ہوتا ہے
    ہر بار ٹوٹنے پر ستاروں کو ہم سہلاتے رہے


    وہ ہیں گنہگار گر ہم میں وفا باقی نہ رہی''شاہ جی''
    کیوں شناساں تنہا مجھے چھوڑ کے جاتے رہے
    ​SHAH G'

    #2
    Re: شناساں بن کر وہ میرے

    kia baat hai shah ji
    We should care for each other more than we care for ideas, or else we will end up killing each other.

    Comment


      #3
      Re: شناساں بن کر وہ میرے

      ​aap ka shukriya...dost
      ​SHAH G'

      Comment


        #4
        Re: شناساں بن کر وہ میرے

        keep it up

        Comment


          #5
          Re: شناساں بن کر وہ میرے

          ​thanks...and i will
          ​SHAH G'

          Comment


            #6
            Re: شناساں بن کر وہ میرے

            “When our absence does not change someone’s life..,

            then accept the reality that our presence has no meaning in their life…!

            Comment


              #7
              Re: شناساں بن کر وہ میرے

              ​aadab-e-arz hey..jnaab
              ​SHAH G'

              Comment

              Working...
              X